امام مسجد کو 15 سالہ بچے کے ساتھ انتہائی شرمناک کام کرتے رنگے ہاتھوں پکڑلیا گیا

لندن(نیوزڈیسک) بچوں کے ساتھ جنسی زیادتی اور قتل کی خبروں نے پاکستان کی فضاءسوگوار کر رکھی ہے۔اب برطانیہ میں ایک امام مسجد ایسا قبیح فعل کرتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑا گیا ہے کہ برطانیہ بھر میں ہنگامہ برپا کر دیا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق مانچسٹر میں یہ 45سالہ امام مسجد ایک 15سالہ لڑکے کے ساتھ منہ کالا کرتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑا گیا ہے۔ یہ شخص شادی شدہ اور پانچ بچوں کا باپ ہے اور برطانوی شہر بلیک برن کی ایک مسجد میں امامت کراتا ہے۔ اس لڑکے سے اس کی ملاقات ہم جنس پرستوں کے لیے بنائی گئی ایپلی کیشن Grinderپر ہوئی۔ لڑکا مانچسٹر کے نواح میں رہتا تھا چنانچہ یہ امام ایک گھنٹے سے زائد سفر کرکے اس کے گھر پہنچا، تاہم علاقے کی نگرانی کرنے والے گروپ کی اس پر نظر پڑ گئی۔وہ لڑکے سے ایسے وقت میں ملنے آیا جب اس کی والدہ کام پر گئی ہوئی تھی۔ نگران گروپ نے ان دونوں کو رنگے ہاتھوں پکڑ لیا۔ نگران گروپ نے اس شخص کی ویڈیو بھی بنائی جس میں یہ التجا کر رہا ہوتا ہے کہ ”مجھے جانے دو، اگر یہ بات عام ہو گئی کہ میں ہم جنس پرست ہوں تو میں قتل کر دیا جاؤں گا کیونکہ یہ میرے مذہب میں حرام ہے۔“ نگران گروپ نے بعدازاں اسے پولیس کے حوالے کر دیا جس نے کم عمر لڑکے کے ساتھ جنسی تعلق استوار کرنے کے الزام میں اس کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  پاکستان مخالف نیو یارک میں پوسٹر آویزاں ۔۔۔یہ نواز شریف کی نااہلی بارے نہیں بلکہ ایسی واقعہ کہ جان کر آپ کے ہوش اڑ جائیں گے