امریکہ پاکستان کا مقروض۔۔۔کتنے ملین ڈالر کا قرضہ ہے:جان کہ ہرکسی کے ہوش اڑ جائیںگے

اسلام آباد( نیوز ڈیسک)امریکا افغانستان میں امریکی اتحادی نیٹو سپلائی کیلئے روڈ نیٹ ورک کے استعمال کرنے پر پاکستان کا 45 ملین ڈالرز کا نادہندہ ہے،امریکا نے پاکستان کو 2013 سے یہ رقم ادا کرنی ہے،یہ انکشاف چند روز قبل پاک افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کیلئے ہونے والے ایک اجلاس میں ہوا ہے،سینئر فوجی حکام بھی اس اجلاس میں شریک تھے اور معلوم ہوا ہے کہ امریکا نیٹو سپلائی کیلئے سال 2013 سے روڈ انفراسٹرکچر استعمال کررہا ہے اور اس کی مد میں پاکستان کا 45 ملین ڈالرز کا مقروض ہے۔اسلام آباد میں ہونےوالے ایک اجلاس میں سول و فوجی حکام نے ان پہلوؤں پر غور کیا کہ اگر ٹرمپ انتظامیہ مزید امداد بند کرتی ہے اور اس کے اثرات کیا ہونگے،افغان ٹرانزٹ ٹریڈ کیلئے پاکستانی راستے سہولیات کے ساتھ استعمال کرنے پر عالمی معیار کے مطابق کمرشل اور نان کمرشل گاڑیوں سے ٹرانزٹ فیس لی جائے۔روزنامہ جنگ کی رپورٹ کے مطابق26 نومبر 2011 کو نیٹو فورسز کے سلالہ حملے میں 28 پاکستانی فوجیوں کی شہادت کے بعد چیف آف آرمی سٹاف جنرل کیانی نے سوچ کو تبدیل کیا اور فیصلہ کیا کہ نیٹو اور امریکی گاڑیوں سے ٹرانزٹ فیس وصول کی جائے،جس کے نتیجے میں دوطرفہ مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کیے گئے۔اس کے بعد 2013 سے امریکا پاکستان کا 45 ملین ڈالرز کا مقروض ہے جبکہ امریکا کا کہنا ہے کہ ہم نے 15 ملین ڈالرز دینے ہیں
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  Burma Latest News in Urdu