اپنی 13 سالہ بیٹی کی ای میل چیک کرتی خاتون کو اس میں ایسی شرمناک ترین چیز نظر آگئی کہ واقعی پیروں تلے زمین نکل گئی، کبھی تصور بھی نہ کرسکتی تھی کہ۔۔۔

آج کل سوشل میڈیا کا استعمال ہر کوئی کر رہا ہے، حتٰی کہ سکول کے بچے بھی فیس بک اور ای میل جیسی چیزوں کا بکثرت استعمال کرتے ہیں۔ بدقسمتی سے سوشل میڈیا کی سہولت کو کچھ بدقماش لوگوں نے جرائم کا ذریعہ بھی بنا لیا ہے اور ایسے میں اگر والدین اپنے بچوں کی آن لائن سرگرمیوں پر نظر نہیں رکھتے تو کچھ بعید نہیں کہ وہ کسی خطرناک مجرم کے چنگل میں پھنس جائیں

دبئی میں مقیم ایک بھارتی خاتون کو ایک ایسی ہی افسوسناک صورتحال کا سامنا اس وقت کرنا پڑ گیا جب وہ ایک روز اتفاق سے اپنی کمسن بیٹی کا ای میل اکاﺅنٹ چیک کر رہی تھیں۔ ای میل میں موجود قابل اعتراض مواد دیکھ کر اگرچہ خاتون کو شدید دھچکا لگا لیکن پھر بھی اسے خوش قسمتی کہئے کہ بروقت

مزید پڑھیں  ’فیس بک آپ کے تمام میسجز چیک کرتی ہے تاکہ۔۔۔‘ فیس بک کے بانی مارک زکربرگ نے ایسی بات کہہ دی کہ ہر کسی کے پیروں تلے زمین نکال دی

یہ چیزیں پکڑی جانے سے ان کی بیٹی کسی بڑے سانحے سے بچ گئی۔
گلف نیوز کے مطابق یہ خاتون ایک دن اتفاقاً اپنی 13 سالہ بیٹی کی ای میل چیک کر رہی تھیں کہ اس میں متعدد فحش فلمیں اور تصاویر دیکھ کر ان کے رونگٹے کھڑے ہو گئے۔ جب انہوں نے بیٹی سے اس کے متعلق پوچھا تو اس نے روتے ہوئے بتایا کہ ان کے گھر آنے والا ایک خاندانی دوست ایک عرصے سے اسے ہراساں کر رہا ہے اور اسی نے یہ فحش مواد بھیجا تھا۔ لڑکی نے مزید بتایا کہ وہ شخص جب بھی ان سے ملنے آتا تھا تو موقع پا کر اسے جنسی طور پر ہراساں کرتا تھا اور طرح طرح کی دھمکیاں دے کر اسے خاموش رہنے پر مجبور کر رکھاتھا۔
ماں نے جب بیٹی کی دردناک داستان سنی تو اس کا دل بہت رنجیدہ ہوا اور اس نے فوری طور پر پولیس سے رابطہ کر لیا۔ خاتون کی شکایت پر پولیس نے ملزم کو گرفتار کر لیا اور تحقیقات کے دوران اس کے خلاف کافی شواہد بھی سامنے آ گئے۔ عدالت نے ملزم کو تین ماہ کی قید اور ملک بدری کی سزا سنائی تھی، جس کے خلاف اس نے اپیلز کورٹ کا رخ کر لیا تھا۔ اب اس کی اپیل بھی رد کر دی گئی ہے اور عدالت نے حکم جاری کیا ہے کہ قید کی سزا مکمل ہونے پر اسے فوری طور پر ڈی پورٹ کر دیا جائے۔

مزید پڑھیں  Facebook aur Messenger par ek jesi Stories

مزید پڑھیں  Whatsapp Status | How to set and use it | 2018

دوستوں سے شئیر کریں