بریکنگ نیوز: جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر فائرنگ ۔۔۔ پاک فوج میدان میں آ گئی

بریکنگ نیوز: جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر فائرنگ ۔۔۔ پاک فوج میدان میں آ گئی

راولپنڈی (ویب ڈیسک )سپریم کورٹ کے جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر حملے پر پاک فوج نے اظہار مذمت کردیا ۔آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر فائرنگ قابل مذمت ہے ۔


انہوں نے کہا کہ ریاستی اداروں کے موثر کردار کے لیے فریقین کو ریاستی اداروں کا تحفظ یقینی بنا نا چاہیے ۔پاک فوج کی جانب سے مزید کہا گیا کہ امن و استحکام کی بہتری کے لیے کوششیں جاری رکھی جائیں گی۔جبکہ دوسری جانب قومی اسمبلی کے اسپیکر ایاز صادق نے کہا ہے کہ اعلیٰ عدلیہ کے جج کے گھر پر فائرنگ بہت افسوسناک واقعہ ہے، جن لوگوں نے اس حرکت کے ذریعے ڈرانے یا دھمکانے کی کوشش کی انہیں کیفر کردار تک پہنچانا چاہیے۔لاہور میں خطاب کرتے ہوئے ایاز صادق کا کہنا تھا کہ میرا حلقہ اب 6 حلقوں میں بٹ گیا مگر میرا دل ریلوے کے لوگوں کیساتھ ہے، پاکستان میں بہت سے تجربات ہوئے چاہتا ہوں کہ بروقت اور شفاف الیکشن ہوں۔اُن کا کہنا تھا کہ سیاست میں جس قسم کی انجینئرنگ ہورہی ہے وہ پاکستان کی بنیادوں کو کھوکھلا کرنے کی سازش ہے، پارٹیاں بدلنےوالے اپنوں کے نہیں ہوسکے وہ کسی اور کے کیا ہوں گے کیونکہ وفاداریاں بدلنے والے جس جماعت سے بھی ہوں ایسے لوگوں کے نام تاریخ میں یاد نہیں رکھےجاتے۔ایازصادق کا مزید کہنا تھا کہ نظام کی اپ گریڈیشن سے ریلوے کی کارکردگی بہتر ہوئی اور اب محکمے کی آمدنی 40 سے 45 کروڑ تک پہنچ چکی،

مزید پڑھیں  ’لڑکے والے مجھے دیکھنے آئے لیکن شکر ہے کہ اس وقت۔۔۔‘ پاکستانی لڑکی نے لوڈشیڈنگ کا وہ فائدہ بتادیا

مجھ سے زیادہ ریلوے پر کوئی تنقید نہیں کرتا تھا کیونکہ خواہش ہے کہ ادارہ بہتر ہو۔اُن کا مزید کہنا تھا کہ سرکاری کنٹرول میں رہتے ہوئے بھی اداروں کو بہتر بنایا جاسکتا ہے، ریلوے کا محکمہ اپنے ریٹائرڈملازمین کو خود پنشن دیتا ہے، حکومت کو چاہئے دیگر اداروں کی طرح ریلوے ملازمین کو بھی سرکاری ادارے سے پینشن ادا کرے۔ایاز صادق کا مزید کہنا تھا کہ محکمہ اسی طرح کام کرتا رہا تو 15سے20 سال میں ہمارا شمار اُن ممالک میں ہوگا جن کا شمار دنیا کے پاس ریلوے کا بہترین نظام موجود ہے۔واضح رہے سپریم کورٹ کے جج جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر گذشتہ رات اور آج صبح فائرنگ کے واقعات پیش آئے تھے، رات کو نامعلوم افراد نے اُن کے گھر کے مرکزی دروازے پر فائرنگ کی تھی جبکہ صبح باورچی خانے کی کھڑکی پر گولی فائر کی گئی تھی۔واضح رہے کہ سپریم کورٹ کے جسٹس اعجازالاحسن کے لاہور میں واقع گھر کے باہر کل رات اور آج صبح دو بارفائرنگ کی گئی ۔اس حوالے سے سیکیورٹی ادارے تحقیقات بھی کر رہے ہیں ۔جسٹس اعجاز الاحسن پاناما ریفرنس میں نگران جج ہیں،اس کے علاوہ وہ پاناما سمیت اہم مقدمات اور فیصلوں کا حصہ رہے ہیں۔ (س)

مزید پڑھیں  چو ہدری نثار علی خان مزید پا رٹی کیسا تھ نہیں چل سکتے کیو نکہ ۔۔۔


ٹاپ نیوز: جناب میں جہاں بھی جاؤں گا آپ کا تابعدار اور وفادار رہونگا ۔۔۔۔۔ بلوچستان میں (ن) لیگی حکومت کا تختہ الٹنے کے پیچھے چھپا اصل کردار لاہور کا نکلا ۔۔۔۔وزیراعلیٰ بلوچستان عبدالقدوس بزنجو نے اپنی زبان سے بڑا اعتراف کر لیا

مزید پڑھیں  کاش میں یہ کام کر جاؤں ۔۔۔۔شہید کرنل سہیل عابد کی زندگی کی دیرینہ خواہش کیا تھی ؟ جانیے ارض پاک کے مایہ ناز بیٹے کی زندگی کا ایک انوکھا راز
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments