بھارت نے حاجیوں پربڑی پابندی عائد کردی

اسلام آ باد (نیوز ڈیسک )بھارت میں عازمینِ حج کو اخراجات کی مد میں دی جانے والی مراعات ختم کر دی گئی ہے۔بھارتی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی کا کہنا ہے کہ رواں سال سے حج پر کوئی امداد نہیں دی جائے گی لیکن اس کے خاتمے کے باوجود بھارت سے ڈیڑھ لاکھ سے زائد عازمین مکہ مکرمہ جائیں گے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ یہ اقدام اقلیتوںکو با اختیار بنانے کیلئے سرکاری پالیسی کا حصہ ہے۔واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے 2012میں حکومت کو حکم دیا تھا کہ 2022 تک حج مدد اسکیم کو مرحلہ وار ختم کیا جائے۔بھارتی حکومت کا کہنا ہے کہ حکومت اس سہولت پر سالانہ 7 ارب روپے خرچ کرتی ہے اب یہ رقم اقلیتی برادری بالخصوص لڑکیوں کی تعلیم اور فلاح و بہبود پر خرچ کی جائے گی۔واضح رہے کہ بھارت میں کئی دہائیوں سے عازمین حج کو خصوصی سہولت فراہم کی جا رہی تھی
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  اوپیک اور روس کا آئندہ 10سے20 سال تک تیل پیداوار پر کنٹرول کرنے کا فیصلہ، منصوبے کی حیرت انگیز تفصیلات منظر عام پر آگئیں