urdu tv online

شمالی وزیرستان میں جام شہادت نوش کرنیوالے پاک فوج کے 21سالہ افسر عبدالمعید کی اپنی شہادت سے قبل چھوٹے بھائی سےفون پر کیا بات ہوئی، جان کر آپ بھی پاک فوج پر فخر کرینگے

بیٹے کی شہادت پر فخر ہے، پاک وطن پر جان قربان کر کے ہمارا سر فخر سے بلند کر دیا، شمالی وزیرستان میں جام شہادت نوش کرنے والے پاک فوج کے سیکنڈ لیفٹیننٹ21سالہ عبدالمعید کے والدین کا بیٹے کی شہادت پر قابل رشک و تقلید بیان سامنے آگیا. تفصیلات کے مطابق لی وزیرستان میں جام شہادت نوش کرنے والے پاک فوج کے سیکنڈ لیفٹیننٹ21سالہ عبدالمعید کے والدین کا بیٹے کی شہادت پر کہنا ہے کہ ہمیں اپنے بیٹے کی شہادت پر فخر ہے جس نےپاک وطن پر جان قربان کر کے ہمارے سر فخر سے بلندکر دئیے ہیں.

مزید پڑھیں  اگر ہمیں لاہور میں جلسہ کرنے سے روکا تو ہم یہ کام کرنے میں دیرنہیں کریں گے۔۔۔۔ تحریک انصاف کی خطرناک دھمکی نے حکومت کے ہوش اڑا دیے

سیکنڈ لیفٹیننٹ عبدالمعید کے والد کا کہنا تھا کہ شہید کو بچپن سے ہی پاک فوج میں جانے کا شوق تھا وہ بہن بھائیوں میں سب سے بڑے تھے . شہید عبدالمعید کے چھوٹے بھائی نے بتایا کہ بھائی اکثر فون کیا کرتے تھے اور جب بھی ان سے فون پر بات ہوتی تھی تو وہ محنت کرنے کی نصیحت کرتے . ان کے چھوٹے بھائی کا کہنا تھا کہ ہمارے بھائی نے شہادت کا جام پی کر عظیم رتبہ حاصل کیا ہے ہمیں اپنے بھائی پر فخر ہے.

دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments