طاہر القادری نے حکومت کو ڈیڈ لائن دے دی کیا کرنے جارہے ہیں ؟ جانئے

لاہور (نیوزڈیسک) لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے طاہر القادری نے کہا کہ ہمارے احتجاج میں سانحہ ماڈل ٹاؤن ہی نہیں بلکہ سانحہ قصور بھی شامل ہو گا ۔ سانحہ ماڈل ٹاؤن پر پاکستان عوامی تحریک کے احتجاج کا سلسلہ رواں ہفتے شروع ہو گا جس میں اب سانحہ قصور بھی شامل کر لیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اس وقت قصور میں سارے ایم این ایز اور ایم پی اے ن لیگ سے ہیں مگر اس کے باوجود ایسے واقعات کئی سال سے ہورہے ہیں۔ عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری کا کہنا تھا کہ پنجاب میں مسلم لیگ (ن) کی حکومت ہے ، حکمران عوام کے جان و مال کے تحفظ میں بری طرح ناکام ہو چکے ہیں ۔ مسلم لیگ(ن) والے غریبوں کی اولادوں کو انسان کا بچہ نہیں سمجھتی ، قصور میں ہونے والا واقعہ درندگی کی بدترین مثال ہے جبکہ شیخوپورہ،فیصل آباد،سرگودھا میں بھی ایسے واقعات ہوئے مگر حکمرانوں کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگی۔ قصور میں احتجاج کے دوران قتل ہونے والے افراد کی ایف آئی آر میں کسی پولیس اہلکارکونامزدنہیں کیاگیا۔
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  امریکا نے امداد بند کر دی تو کیا ہوا ،حافظ سعید نے زبردست مشورہ دے دیا