چیف جسٹس ثاقب نثارنے ملک میں فساد پھیلانے والوںکےلئے انتہائی اہم اقدام اٹھا لیا

اسلام آباد(نیوزڈیسک)چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے ایگزیکٹ جعلی ڈگری سکینڈل کا ازخود نوٹس لے لیا ،ڈی جی ایف آئی اے سے 10 روز میں رپورٹ طلب کر لی اور ایگزیکٹ سکینڈل سماعت کیلئے مقرر کرنے کا حکم دے دیا۔دوران سماعت چیف جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی بدنامی کرنے والا کوئی بچ کر نہیں جائے گا،ایگزیکٹ سکینڈل کے باعث ہمارے سرشرم سے جھک گئے،اگر اطلاعات درست ہیں تو ڈی جی ایف آئی اے جعلی ڈگری سے متعلق مہم کا پتاچلائیں اور ان کیخلاف ایکشن لیں جو پاکستان کا نام بدنام کررہے ہیں۔چیف جسٹس آف پاکستان نے کہا کہ سکینڈل سے پاکستان کی عالمی سطح پربدنامی ہورہی ہے،ایگزیکٹ سکینڈل سے متعلق مقدمات عدالتوں میں زیرالتوابھی ہیں،انہوں نے کہا کہ ڈی جی ایف آئی اے مفصل رپورٹ پیش کریں،چیف جسٹس نے ایگزیکٹ سکینڈل ازخود نوٹس سماعت کیلئے مقررکرنے کابھی حکم دیا۔یادرہے کہ پہلی مرتبہ ایگزیکٹ ڈگری سکینڈل 2015 میں نیویارک ٹائمز نے بریک کیا تھا ۔
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  این اے 120 کے ضمنی الیکشن : کئی ماہ بعد ڈاکٹر یاسمین راشد کا تہلکہ خیز انکشاف