ہاتھ کا انگوٹھا موت سے قبل از وقت خبر دیتا ہے


loading…



انسانی شخصیت کو جاننا اور اس کے مستقبل کےبارے میں بتانے کے لئے نجومی کئی طرح کے طریقے استعمال کرتے ہیں جن میں سے آںکھوں کا رنگ ، ہاتھوں کی سآخت انگوٹھے کا سائز اور ہاتھ کی لکیریں شامل ہیں لیکن اس میں ہاتھ کے انگھوٹے کو خاص اہمیت دی جاتی ہے ی ظاہری صورت کافی اہمیت کی حامل ہوتی اس کی ساخت اور موٹائی اس پر بات کی طرف اشارہ کرتی ہے کہ آپ

جسمانی طور پر کتنے صحت مند ہے اور کتنی زندگی گزارے گے نجومیوں کے مطابق کسی شخص کے ہاتھ کا انگوٹھے کا حتی کے بعض کے مطابق یہ موت کا وقت بھی بتا ستکتی ہےماہرین کے مطابق انسان کے ہاتھ کا انگوٹھا اور اس کا تعلق دماغ سے ہوتا ہے اگر اس میں کوئی طاقت نہ رہے یا ہتھیلی کی طرف جھک جائے تو اس کا مطلب ہے کہ اس شخص کی موت قریب

 

آچکی ہے اور یہ دنیا سے جانے والا ہے کیونکہ انگوٹھے میں اس حد تک کمزوری تب ہی ہوتی ہے جب انسان مرنے والا ہو اور اگر انگوٹھے میں لزرش پیدا ہو اجتی ہے یا کسی کہ اٹھانے کے بعد سکت نہیں رہتی تو اس کا مطلب ہے کہ انسان کو کوئی ایسی بیماری لاحق ہے جو اسے اندر سے کھوکھلا کر رہی ہے جس کی وجہ سے طاقت زائل ہو رہی ہے

 

ایسے ہی جس شخص کا انگوٹھا موٹا اور چھوٹا ہو ایسے لوگ سخت مزاج ہوتے ہیں اور کام نکالنے کے لئے کسی بھی حد تک جا سکتے ہیں ایسے لوگوں میں تحمل کا مادہ بہت کم ہوتا ہے اور بات بات پر الجھتے ہیں اس کی بنسبت وہ لوگ جن کے ہاتھ کا انگوٹھا لمبا ہو ان میں مستقل مزاجی اور استقامت بہت ہوتی ہے اور ایسے لوگ مہذب ہوتے ہیں اور لڑائی جھگڑے سے پرہیز کرتے ہیں






loading…

دوستوں سے شئیر کریں