ہمیں امریکہ سے پیسے نہیں بھروسہ چاہیے، ڈی جی آئی ایس پی آر

urdu tv onlineراولپنڈی جدت ویب ڈیسک : ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے کہا ہے کہ پاکستان اور امریکا کے تعلقات بہت اچھے رہے ہیں لیکن ہم برائے فروخت نہیں، ہمیں امریکا سے امداد نہیں اعتماد چاہیے، اتحادی فوج کو افغانستان میں موجود ٹی ٹی پی کے ٹھکانے ختم کرنے ہوں گے۔ذرائع کے مطابق ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ پاکستان اور امریکا ایک دوسرے کے ساتھ بلیم گیم نہیں کرتے بلکہ جس سطح پر بھی بات چیت ہو اس پر عمل درآمد کیا جاتا ہے، ہم نے افغان سرحدوں سے داخل ہونے والی اس جنگ کا مقابلہ بھی کیا اور امریکا کے ساتھ مکمل معاونت کی حالانکہ دہشت گردی کے خلاف جنگ ہماری نہیں تھی بلکہ ہم پر مسلط کی گئی، کیا القاعدہ کے خلاف آپریشنز پاکستان اور پاکستانی فورسز کے تعاون کے بغیر ممکن تھے؟ دہشت گردی کے خلاف جو جنگ چل رہی ہے کیا وہ پاکستان کے تعاون کے بغیر ممکن تھی؟ ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ افغانستان میں جنگ امریکا اور اس کے اتحادیوں کو لڑنی ہے پاکستان اور امریکا کے بہت اچھے تعلقات رہے ہیں لیکن ہم برائے فروخت نہیں، ہمیں امریکا سے امداد نہیں اعتماد چاہیے کیونکہ اعتماد کی بنیاد پر ہی تعلقات سب سے بہتر ہوتے ہیں اس طرح کے بیانات دونوں ممالک کے درمیان تعاون کے لیے خطرہ ثابت ہوسکتے ہیں، امریکی نائب صدر کے بیان کا جواب دفتر خارجہ یا حکومت دے سکتی ہے۔ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے کہا کہ ہمیں امریکہ سے پیسے نہیں بھروسہ چاہیے، یہ کہنا کہ پیسے دیے ہیں تو تعاون کریں یہ بات صحیح نہیں، پاکستان پیسوں کے لیے نہیں لڑ رہا، افغانستان کے اندر کی جنگ امریکی اور اتحادی فورسز کو لڑنا ہوگی اور اتحادی فوج کو افغانستان میں موجود تحریک طالبان پاکستان کے ٹھکانے ختم کرنے ہوں گے۔

مزید پڑھیں  وزیراعلیٰ بلوچستان کا اپنی تنخواہ کے حوالے سے بڑا اعلان کر دیا
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments