19 سالہ دیسی لڑکے کی گوری لڑکی کے ساتھ محبت۔۔۔لڑکے کے والدین نے وہ سلوک کیا کہ زمانہ جاہلیت کی مثال قائم کردی

لندن(نیوزڈیسک) برطانیہ میں ایک 19سالہ سکھ لڑکے کو گوری لڑکی سے محبت ہو گئی لیکن لڑکے کے والدین کو ان کا یہ تعلق پسند نہ آیا اور انہوں نے اپنے بیٹے کو اس سے منع کیا جس پر اس نے والدین کے ساتھ ایسا سلوک کرنے کی ٹھان لی کہ جان کر تمام والدین کانپ اٹھیں گے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق 19سالہ گرتیج سنگھ رندھاوااے لیول کا طالب تھا اور برطانوی شہر والورہیمپٹن میں والدین کے ساتھ رہتا تھا۔ اس کے والدین نے گوری کی ساتھ اس کے معاشقے کی شدید مخالفت کی تو اس نے والدین ہی کو ٹھکانے لگانے کا پروگرام بنا لیا اور خفیہ انٹرنیٹ کے ذریعے ایک بم خریدلیا۔خوش قسمتی سے لڑکے کی اس خریداری کی خبر ایف بی آئی کے ایجنٹس کو ہو گئی جو خفیہ انٹرنیٹ کی نگرانی پر مامور تھے۔ ان ایجنٹس نے بم فروخت کرنے والے ڈیلرز کا روپ دھار لیا اورگرتیج کے ساتھ رابطہ کیا۔ جب اسے بم ڈیلیور کیا گیا تو ایجنٹس نے ڈبے سے اصلی بم نکال کر اس کی جگہ مصنوعی بم رکھ دیا اور گرتیج کی نگرانی کرنے لگے اور جب گرتیج نے یہ بم اپنے والدین کی گاڑی میں نصب کر دیا توایجنٹس نے اسے گرفتار کر لیا۔برمنگھم کراؤن کورٹ سے گرتیج کو 8سال قید کی سزا سنا کر جیل بھجوا دیا گیا ہے۔اس مقدمے میں گرتیج کی 18سالہ گرل فرینڈ اور ایک 45سالہ خاتون سے بھی تفتیش کی گئی تاہم انہیں بعدازاں رہا کر دیا گیا۔این سی اے کے آرمڈ آپریشنز یونٹ کے آفیسر ٹم گریگری کا کہنا تھا کہ ”گرتیج نے جس بم کا آرڈر کیا تھا وہ انتہائی طاقتور تھا اور کئی افراد کی موت کا باعث بن سکتا تھا۔
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  امریکی سکول میںطالبہ نےاندھا دھند فائرنگ کردی۔۔۔وجہ کیا بنی جانئے اس رپورٹ میں