‘ 9سالہ بچہ کینسر سے جنگ ہارگیا: جاتے جاتے اپنے ماں باپ کو کیا نصیحت کی۔۔۔جانئے اس رپورٹ میں

لندن(نیوزڈیسک) برطانیہ میں ایک 9سالہ بچہ کینسر کا شکار ہو کر موت کے منہ میں چلا گیا لیکن جاتے جاتے اپنے ماں باپ کو ایسی بات کہہ گیا جس نے پوری دنیا کو رُلا کر رکھ دیا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق برطانوی شہر برسٹل کا بےلے کوپر نامی یہ بچہ 15ماہ قبل Non-Hodgkin lymphomaنامی کینسر کا شکار ہوا۔ علاج کے باوجود مرض بڑھتا گیا اور گزشتہ روز بیلے چل بسا۔ اپنی موت سے چند گھنٹے قبل اس نے اپنے ماں باپ کو کہا کہ ”میری موت کے بعد آپ لوگ صرف 20منٹ تک رو سکتے ہو۔ اس سے زیادہ مت رونا۔“بیلے کی 28سالہ ماں ریچل حاملہ تھی اور اسے کے ہاں بیٹی کی پیدائش متوقع تھی۔ بیلے کا مرض شدید تھا لیکن اس کا کہنا تھا کہ میں اپنی بہن سے ملے بغیر نہیں جاؤں گا۔ اس کی موت سے دو روز قبل ریچل نے بچی کو جنم دیا اور اگلے روز بیلے اپنی بہن کو گود میں اٹھا کر اس کے ساتھ کھیلتا رہا اور پھر چند گھنٹے بعد دم توڑ دیا۔اس کی والدہ ریچل کا کہنا تھا کہ ”بیلے کا مرض بہت شدید تھا، ڈاکٹروں نے کہہ دیا تھا کہ وہ ہماری بیٹی کی پیدائش تک زندہ نہیں رہے گا لیکن وہ اپنی بہن سے ملنے کے لیے بہت پرعزم تھا۔ جب اس کی بہن کو اس کے سامنے لایا گیا تو اس نے اسے گود میں اٹھا لیا، سینے سے لگایا، ماتھا چوما اور ہر وہ کام کیا جو بڑا بھائی کرتا ہے۔ہماری بیٹی کا نام ’مِلی‘ بھی اسی نے رکھا۔ مِلی سے ملنے کے چند گھنٹے بعد ہی اس کی سانسیں اکھڑنے لگیں اور وہ موت کی آغوش میں چلا گیا۔
دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  آسٹریلیا میں شدید گرمی کاکتنے سالہ ریکارڈ ٹوٹ گیا،جان کر آپ بھی حیران