indian new country

قاہرہ(مانیٹرنگ ڈیسک) ایک ایسے وقت پر کہ جب ساری دنیا لڑائی جھگڑوں میں الجھی ہے ایک بھارتی نوجوان نے موقع پا کر چپکے سے مشرق وسطٰی کے دو ممالک کے درمیان لاوارث پڑی جگہ پر قبضہ کر لیا ہے۔ صرف یہی نہیں بلکہ اس جگہ کو ایک نیا ملک قرار دے کر خود کو اس کا بادشاہ بھی قرار دے ڈالا ہے۔
ٹائمز آف انڈیا کے مطابق یہ چالاک نوجوان سیاش ڈکشٹ ہے، جس نے گزشتہ دنوں سوڈان اور مصر کے درمیان واقع صحرائی علاقے بیر تاول کا سفر کیا اور چونکہ یہ علاقہ دونوں ریاستوں میں سے کسی کی بھی ملکیت نہیں لہٰذا سیاش ڈکشٹ نے وہاں اپنا جھنڈا لہرا دیا ہے اور اس جگہ کو اپنی سلطنت قرار دے ڈالا ہے۔

مزید پڑھیں  شہزادہ ولید بن طلال کی خودکشی ۔۔۔وجہ کیا بنی جان کر آپ کے بھی ہوش اڑ جائیںگے

اس نے اپنی ریاست کا نام کنگڈم آف ڈکشٹ، یعنی ’سلطنت ڈکشٹ‘ رکھا ہے اور اس کے لئے ایک خوبصورت جھنڈا بھی تیار کیا ہے جو سرخ اور پیلے رنگ کی پٹیوں پر مشتمل ہے، جن کے درمیان میں ریاست کا علامتی نشان بنایا گیا ہے۔ سیاش ڈکشٹ نے اپنی بادشاہی کا اعلان ایک فیس بک پوسٹ کے ذریعے کرتے ہوئے کہا ”میں، سیاش ڈکشٹ، خود کو سلطنت ڈکشٹ کا پہلا حکمران مقرر کرتے ہوئے اس بات کا باقاعدہ طور پر اعلان کر رہا ہوں۔ آج سے میں ’شاہ سیاش اول‘ کہلاﺅں گا۔ میں اس لاوارث زمین بیر تاول کو اپنی ریاست قرار دیتا ہوں اور آج کے بعد یہ ریاست ساری کی ساری میری ملکیت ہے۔ میں اپنی سرزمین اور اس کے باسیوں کی خوشحالی اور حفاظت کا عہد کرتا ہوں۔ بنجر صحرا کے بیچ و بیچ واقع اس سرزمین تک پہنچنے کے لئے میں نے 319 کلومیٹر کا خطرناک سفر طے کیا ہے۔ 800 مربع میل پر مشتمل یہ زمین کسی کی ملکیت نہیں ہے۔ یہ کسی ریاست یا ملک کا حصہ نہیں ہے۔ قدیم تہذیبوں کی روایات کے مطابق میں نے اس سرزمین پر اپنے قبضے کی داغ بیل ڈالنے کے لئے یہاں ایک بیج بویا ہے اور اسے پانی بھی دیا ہے۔ اب یہ سرزمین میری ہے۔“

دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments