Umer qaid ki saza suna di gayi

عالمی فوجداری عدالت نے بوسنیا جنگ کے دوران سرب فوج کی کمانڈ کرنے والے راتکو مالدیچ المعروف ’’بوسنیا کا قصاب‘‘ کو نسل کشی اور جنگی جرائم کا مجرم ٹھہراتے ہوئے عمر قید کی سزا سنادی۔امریکی میڈیا رپورٹ کے مطابق دی ہیگ میں سابق ریاست یوگوسلاویہ میں جنگی جرائم کی تحقیقات کیلئے قائم کیے گئے انٹرنیشنل کرمنل ٹریبونل میں ہونے والی سماعت میں راتکو مالدیچ کو جنگ کے دوران نسل کشی اور دیگر مظالم کے 11 میں سے 10 الزامات پر مجرم ٹھہرایا گیا اور انہیں عمر قید کی سزا سنادی گئی۔سماعت کے دوران جب ججز نے اپنے ریمارکس دینا شروع کیے تو راتکو مالدیچ نے شور مچانا شروع کردیا اور ججز کو جھوٹا کہنے لگا۔ مالدیچ کے وکیل نے ججز سے درخواست کی کہ سماعت کچھ دیر کے لیے ملتوی کی جائے کیوں کہ ان کے موکل کا بلڈ پریشر بڑھ گیا ججز نے درخواست مسترد کرتے ہوئے سماعت جاری رکھنے کا فیصلہ کیا اور سیکیورٹی گارڈز کو طلب کرکے مالدیچ کو کمرہ عدالت سے باہر لے جانے کی ہدایت کی۔ مالدیچ کو علیحدہ کمرے میں منتقل کیا گیا جہاں سے انہوں نے بقیہ عدالتی کارروائی دیکھی۔

دوستوں سے شئیر کریں

Comments

comments

مزید پڑھیں  نواز شریف کی نااہلی صر ف چند دنوں کی ہے کیونکہ۔۔۔ مریم نواز کے انکشاف نے ملکی سیاست میں نیا ہنگامہ کھڑا کر دیا